سانحہ داتا دربار کی تفتیش الجھ گئی، مشکوک لڑکے نے بےگناہی کی ویڈیو جاری کردی

لاہور: سانحہ داتا دربار میں مشکوک قرار دیئے گئے لڑکے کی جانب سے اپنی بے گناہی کی وڈیو جاری کئے جانے کے بعد واقعے کی کی تفتیش مزید الجھ گئی ہے۔

سانحہ داتا دربار کے حوالے سے 2 مشکوک لڑکوں کی فوٹیجز سامنے آنے کے بعد انہیں خودکش حملہ آور کے سہولت کار قرار دیا جارہا تھا۔ جس کے جواب میں ایک ایمن آباد گوجرانوالہ کے رہائشی لڑکے نے اپنی ویڈیو جاری کردی، جس میں اس نے کہا کہ وہ صرف داتا صاحب دعا مانگنے کے لیے گیا تھا لیکن اسی اتنے میں دھماکا ہوگیا اور بھگڈر مچ گئی، اس کے حوالے سے بغیر ثبوت فوٹیج چلائی جا رہی ہے اور دہشت گرد کہا جا رہا ہے جو کہ زیادتی ہے، اس معاملے سے کوئی لینا دینا نہیں ہے۔…