پنجاب میں سرکاری سکولوں کے اساتذہ کی ٹرانسفر پالیسی کا زبردست رسپانس

لاہور(26 مئی): پنجاب میں سرکاری سکولوں کے اساتذہ کیلئے 2019 کا ٹرانسفر عمل اس وقت جاری ہے. روایتی طور پر یہ طریقہ کار ایک بوجھل، پر تاخیر اور حکام پر منحصر ہوتا ہے. تاہم محکمہ سکول ایجوکیشن نے اس سال آن لائن ای-ٹرانسفر نظام متعارف کروایا ہے جس کا مقصد ٹرانسفر کے طریقہ کار کو مؤثر بنانے کے ساتھ اس پورے عمل کو سادہ، آسان اور شفاف بنانا ہے.

تقریباً اڑھائی لاکھ اساتذہ نے کامیابی سے ای-ٹرانسفر نظام میں لاگ ان کیا ہے اور 20 مئی 2019 سے ایک لاکھ سے اوپر اساتذہ نے اپنے ڈیٹا کی تصدیق کرتے ہوئے 41 ہزار سے زائد ٹرانسفر ترجیحات جمع کروائی ہیں، اور یہ سب اپنے موبائل فون کی راحت سے.

اساتذہ SIS کی ایپ پر اپنے CNIC اور پاس ورڈ کے ساتھ لاگ ان ہوتے ہیں. ان کو انفرادی ٹرانسفر درخواستوں، سکولوں میں منظور شدہ پوسٹس اور ویٹ لسٹ تک رسائی حاصل ہے. روایتی طور پر یہ ساری معلومات فائلوں میں بند ہوتی تھیں جن پہ صرف چند منظورِ نظر افراد کو ہی رسائی دی جاتی تھی.

ای-ٹرانسفر نظام میں خود کار چیک موجود ہیں جو اساتذہ کو صرف انہی سکولوں میں ٹرانسفر کیلئے اپلائی کرنے دیتا ہے جہاں اساتذہ کی کمی ہو اور ان سکولوں میں اپلائی کرنے سے روکتا ہے جہاں پہلے ہی اساتذہ STR کی بنیاد پر سرپلس ہیں.

یہ انتہائی جدید نظام پنجاب انفارمیشن اور ٹیکنالوجی بورڈ کے اشتراک سے وضع کیا گیا ہے. اس نے حکومت کو شراکت داروں کے تعمیری فیڈ بیک کو بروقت پالیسی اور نظام کی بہتری کیلئے استعمال کرنے کے قابل بنایا ہے. 20 مئی 2019 کو محکمہ سکول ایجوکیشن نے ٹرانسفر کیلئے ضروری کم از کم مدت کو 3 سال سے کم کرکے 1 سال کرنے کا فیصلہ کیا جو کہ ہزاروں اساتذہ کیلئے باعثِ اطمینان ہے. حال ہی میں سکول ایجوکیشن کی ہیلپ لائن پر اساتذہ کی فیڈ بیک پر سکول ہیڈز کو ڈیٹا اپڈیٹ کرنے کیلئے مزید 72 گھنٹے دئیے گئے ہیں تاکہ زیادہ سے زیادہ اساتذہ اس سہولت سے فائدہ اٹھا سکیں.

ای-ٹرانسفر نظام اضلاع کے اندر ٹرانسفر کیلئے درخواستیں27 مئی (دن 3 بجے) سے 3 جون تک وصول کرے گا. اس کے بعد خود کار ویٹ لسٹوں کی بنیاد پر درخواستوں کی منظوری یا مسترد کرنے کا مرحلے کا آغاز ہو جائے گا. بین الاضلائی ٹرانسفر کا آغاز پہلے مرحلے کے اختتام پر ہو گا.

ای-ٹرانسفر نظام کو حکومت کے ایک ایسے انقلابی آغاز کار کے طور پر سراہا گیا ہے جس نے ٹرانسفر کے روایتی فرسودہ نظام کو کامیابی سے تبدیل کیا ہے. دوسری طرف اساتذہ اور فیلڈ افسران بھی ای-ٹرانسفر نظام کو اس کی آسانی، شفافیت اور قیمتی وقت کی بچت جیسی خصوصیات کی وجہ سے سراہ رہے