صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن کمیشن کی زیر صدارت یونیورسٹی آف جھنگ کا سنڈیکیٹ اجلاس

جھنگ(۲۷ستمبر):صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن کمیشن کی زیر صدارت یونیورسٹی آف جھنگ کا سنڈیکیٹ اجلاس ہوا۔ جس میں صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن کمیشن یاسرہمایوں، وائس چانسلر ڈاکٹر شاہد منیر، ممبرز صوبائی اسمبلی معاویہ اعظم،کرنل(ر) غضنفر عباس، ساجدہ بیگم،ایڈیشنل سیکرٹری طارق حمید بھٹی،ایڈیشنل سیکرٹری لاء محمد اقبال،ایڈیشنل سیکرٹری فنانس،پنجاب ہائر ایجوکیشن کمیشن سے نعمان مقبول، سلطانہ کوثر،شیخ فواد اکرم اور محمد زمان نے بھی شرکت کی۔
سنڈیکیٹ اجلاس میں ممبران نے یونیورسٹی آف جھنگ کے وائس چانسلر ڈاکٹر شاہد منیر کی بھرپورداخلہ مہم، خصوصا میرٹ پر فیکلٹی کی بھرتیوں کے لئے کاوشوں کو سراہا اور اسکی باقاعدہ منظوری دی۔اجلاس میں اہم آسامیوں پر تعیناتی کے حوالے سے سرچ کمیٹی کے ممبران کی بھی منظوری دی گئی۔ اس موقع پر صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن کمیشن یاسر ہمایوں نے کہا کہ سرکاری یونیورسٹی میں رجسٹرار، کنٹرولر اور خزانچی کی تعیناتی سرچ کمیٹی کے ذریعے عمل میں لائی جائے گی۔جامعات کی انتظامی امور کو احسن انداز میں چلانے کے لئے قابلیت اور شفافیت کی پالیسی پر عمل ناگزیر ہے۔
صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن کمیشن نے جھنگ کے طلبہ و طالبات اوروالدین کے نام اپنے پیغا م میں کہا کہ وائس چانسلر یونیورسٹی آف جھنگ اورجھنگ سے ممبرز قومی اسمبلی کی کاوشوں سے جھنگ یونیورسٹی تیزی سے آگے بڑھ رہی ہے۔ آنے والے سال یونیورسٹی کے فنڈز میں اضافہ کیا جائے گا۔انہوں نے مزید کہا کہ حکومت پنجاب کے وعدے کے مطابق یونیورسٹی آف جھنگ کو صفہ اول کی یونیورسٹی بنایا جائے گا۔ انہوں نے اس سال انٹر کا امتحان پاس کرنے والے طلبہ و طالبات کو مبارک باد دی اور کہا کہ وہ اپنی مقامی یونیورسٹی کو بھرپور سپورٹ کریں یہ ادارہ آپکے علاقے کی تعمیر وترقی میں اہم کردار ادا کرے گا۔ صوبائی وزیر نے یونیورسٹی کی تمام ٹیم کی کوششوں کو بھی سراہا۔
وائس چانسلر ڈاکٹر شاہد منیر نے معزز ممبران کو بتایا کہ یونیورسٹی کے پہلے ہی سال بڑی تعداد میں طلبہ و طالبات نے داخلے کے لئے درخواستیں جمع کروائیں ہیں، انشااللہ اگلے ماہ سے کلاسز کا باقاعدہ آغاز کر دیا جائے گا۔یونیورسٹی کی بلڈنگ کی تعمیر کا کام بھی رواں مالی سال شروع ہو جائے گا۔