تعلیمی معیار کی بہتری کے لئے مل کر کام کرنے کی ضرورت ہے، وائس چانسلر پروفیسر نیازاحمد

لاہور (30دسمبر،بدھ):وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی پروفیسر نیازاحمد اخترنے کہا ہے کہ اعلیٰ تعلیمی اداروں میں کوالٹی ایجوکیشن کیلئے سب کو مل کر کام کرنے کی ضرورت ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پنجاب یونیورسٹی کوالٹی انہانسمنٹ سیل کے زیر اہتمام ’اعلیٰ تعلیمی اداروں میں کوالٹی اشورنس: چیلنجز اور اصلاحات‘ کے موضوع پرآن لائن قومی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر و وائس چانسلر پنجا ب یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹرمحمد سلیم مظہر، ڈین فیکلٹی آف آرٹس اینڈ ہیومینٹیز ڈاکٹر عامرہ رضا، چیئرپرسن ڈی پی سی سی ڈاکٹر انجم نسیم صابری، ڈائریکٹر کوالٹی انہانسمنٹ سیل پروفیسر ڈاکٹر محمد سعید، فیکلٹی ممبران جبکہ وائس چانسلر محمد نواز شریف یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی ملتان پروفیسر ڈاکٹر عامر اعجاز، چیئرمین نیشنل ایکریڈیٹیشن کونسل فار ٹیچر ایجوکیشن ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آباد پروفیسر ڈاکٹر محمد میمن و دیگر نے آن لائن شرکت کی۔اپنے خطاب میں وائس چانسلر پروفیسر نیازاحمد نے کہا کہ شعبہ تعلیم کو کوالٹی آف فیکلٹی، ہیومین ریسورس، انفراسٹرکچر سمیت کئی مسائل درپیش ہیں جن سے نبردآزماہونے کیلئے تمام سٹیک ہولڈرز کو مشترکہ کوششیں کرنی ہوں گی۔ انہوں نے کہا کہ کوالٹی انہانسمنٹ سیلز قائم کرنے کے لئے 15یونیورسٹیوں کا انتخاب کیا گیا تھا تاکہ اعلیٰ تعلیم کا معیار بہتر ہو سکے جبکہ عصر حاضر میں تمام اداروں میں کوالٹی انہاسمنٹ سیلز قائم ہیں۔ انہوں نے بہترین کانفرنس کے انعقاد پر منتظمین کو مبارک باد پیش کی۔ڈاکٹر عامر اعجاز نے کہا کہ یونیورسٹیوں کو تعلیم کا گہوارہ سمجھا جاتا ہے جس کی وجہ سے ان پر زیادہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ طلباؤ طالبات کو مثالی بنانے کیلئے اساتذہ کو بھرپور کردار ادا کرنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جی ڈی پی کا دو فیصد خرچ کیا جاتا ہے جو کم از کم چار فیصد ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ اپنے جی ڈی پی کا 2.5فیصد ریسرچ اینڈ ڈیویلپمنٹ پر لگاتا ہے جبکہ پاکستان میں.1اور.2فیصد خرچ کیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں تعلیمی انقلاب کے لئے ضروری ہے کہ تعلیم پر زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاری کی جائی۔ پروفیسر ڈاکٹر محمد سعید نے کانفرنس کے اغراض و مقاصد بیان کرتے ہوئے کہا کہ تعلیمی ماہرین کو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کر کے ایک دوسرے کے تجربات سے فائدہ اٹھانے کا موقع ملے گا۔